خیبر پختونخوا میں ڈاکٹرز کی ہٹ دھرمی برقرار، مریضوں کو شدید مشکلات کا سامنا

پشاور:  خیبر پختونخوا میں ڈاکٹرز کی ہڑتال 46 ویں روز بھی جاری جس کے باعث مریضوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے،صوبائی حکومت نے ہڑتالی ڈاکٹرز کو ملازمت سے فارغ کرنے کی تیاری کرلی ۔ تفصیلات کے مطابق خیبرپختونخوا میں 46 ویں روز بھی ڈاکٹرز کی ہڑتال جاری رہی جب کہ ڈاکٹرز نے ان ڈور سروسز اور وارڈز وزٹ بھی بند کردیے جس کے باعث مریضوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے، حکومت کے بیک ڈور رابطے بھی کام نہ آسکے اور گرینڈ ہیلتھ الائنس نے اجتماعی استعفے دینے کی تیاری کرلی ہے۔دوسری جانب صوبائی حکومت نے ہڑتالی ڈاکٹرز کو ملازمت سے فارغ کرنے کی تیاری کرلی ہے، ڈسٹرکٹ ہیلتھ انفارمیشن سسٹم کو ہڑتالی ڈاکٹروں کا ڈیٹا فراہم کرنے کے احکامات دیے گئے ہیں۔محکمہ صحت کی جانب سے جاری اعلامیہ کے مطابق ہڑتالی ملازمین ڈیوٹی انجام نہیں دے رہے لیکن تنخواہیں وصول کررہے ہیں، احتجاج و ہڑتال کرنے والے ملازمین ہیلتھ سسٹم کے انتشار کا باعث بن رہے ہیں لہذا ڈاکٹروں و طبی عملے کی تنخواہوں کو بھی فوری طور پر بند کیا جائے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں