وزیراعلیٰ بلوچستان نے سرکاری ملازمین کے علاج معالجہ کے اخراجات کی واپسی کی منظوری دیدی

کوئٹ: وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے سرکاری ملازمین کے علاج معالجہ کے اخراجات کی ری ایمبرسمنٹ (واپسی) کی منظوری کی پالیسی میں ترمیم کی منظوری دے دی ہے، یہ منظوری انہوں نے محکمہ صحت کی جانب سے پیش کی گئی سمری پر دی، نئی پالیسی کے مطابق سرکاری ملازمین اور ان پر انحصار کرنے والے ان کے خاندان کے افراد کے پچاس ہزار روپے تک کے میڈیکل کلیمز کی منظوری کا اختیار ڈائریکٹر جنرل ہیلتھ کو دے دیا گیا ہے، ایک لاکھ روپے تک کے کلیمز کی منظوری محکمہ کا انتظامی سیکریٹری دے سکے گا اور بیس لاکھ روپے تک کے کلیمز کی منظوری کا اختیار چیف سیکرٹری کو حاصل ہوگا جبکہ بیس لاکھ روپے سے زائد کے میڈیکل کلیمز منظوری کے لئے وزیراعلیٰ کو پیش کئے جائیں گے، علاوہ ازیں ایمرجنسی کی صورت میں ریفر کے بغیر ان ڈور مریضوں کے کیسز کے بیس لاکھ روپے تک کے کلیمز کی منظوری چیف سیکریٹری جبکہ بیس لاکھ روپے سے زائد مالیت کے کلیمز کی منظوری وزیراعلیٰ دیں گے، نئی پالیسی کا اطلاق فوری طور پر ہوگا۔ اس اقدام کا مقصد میڈیکل کلیمزکے زیر التواء کیسز کوفوری طور پرنمٹانا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں